سلمان خورشید نے کہا تین طلاق بل نجی زندگی میں مداخلت ، سول معاملہ کو فوجداری قانون کے دائرہ میں لے جائے گا

سلمان خورشید نے کہا تین طلاق بل نجی زندگی میں مداخلت ، سول معاملہ کو فوجداری قانون کے دائرہ میں لے جائے گا

کانگریس نے تین طلاق کے خلاف پارلیمنٹ میں پیش بل کی حمایت کرتے ہوئے کہا کہ مسلم خواتین کے حقوق اور تحفظ کیلئے اس کو مزید سخت بنانے کی ضرورت ہے ۔ پارٹی نے یہ بھی مطالبہ کیا کہ اس قانون کو پارلیمنٹ کی مستقل کمیٹی میں بھیجا جانا چاہئے ۔ تاہم پارٹی کے ایک سینئر لیڈر اور سابق وزیر قانون سلمان خورشید نے اس کی مخالفت کی ہے۔تین طلاق سے متعلق بل پر گفتگو کرتے ہوئے سلمان خورشید نے کہا کہ مجوزہ قانون لوگوں کی نجی زندگی میں مداخلت ہے اور یہ سول معاملہ کو فوجداری قانون کے دائرے میں لے جائے گا۔قابل ذکر ہے کہ قانون پر بحث کے دوران کانگریس کے لیڈر ملکارجن کھڑگے نے قانون کو مستقل کمیٹی میں بھیجنے کا مطالبہ کیا تھا ۔ انہوں نے کہا کہ کمیٹی میں اس قانون پر پوری طرح سے تبادلہ خیال کیا جاسکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ قانون کو کمیٹی میں بھیجنے کے مطالبہ صرف کانگریس کا ہی نہیں بلکہ کئی دیگر پارٹیو ں کا بھی ہے۔