پاکستان نے جاسوسی کے الزام میں کلبھوشن کو موت کی سزا سنائی

پاکستان نے جاسوسی کے الزام میں کلبھوشن کو موت کی سزا سنائی

 

اسلام آباد: حکومتِ پاکستان نے جاسوسی کے الزام میں موت کی سزا پانے والے ہندوستانی شہری كلبھوشن جادھو کو اپنی اہلیہ سے ملاقات کی اجازت دی ہے۔پاکستانی وزارت خارجہ کے ترجمان نے آج یہاں ایک بیان میں کہا کہ پاکستان کی حکومت نے جادھو کو اپنی اہلیہ سے ملاقات کاانتظام کرنے کا فیصلہ کیا ہے اور اسلام آباد میں واقع ہندوستانی ہائی کمیشن کو آج اس سلسلے میں آگاہ کر دیا گیا ہے۔

بیان میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ جادھو عرف حسین مبارک پٹیل ہندوستانی بحریہ کا كمانڈر ہے اور وہ ہندوستانی خفیہ ایجنسی را کےلیے کام کرتا ہے۔ اسے 3 مارچ 2016 کو غیر قانونی طور پر پاکستان میں گرفتار کیا گیا تھا۔ہندوستان نے كلبھوش جادھو سے سفارتی رابطے کی ان گنت اپیلیں کیں لیکن حکومت پاکستان نے اس پر کسی طرح کا رد عمل نہیں کیا