نسیم خان نے کہا ناندیڑ کے عوام نے فرقہ پرست طاقتوں کے خلاف ووٹ دیا

نسیم خان نے کہا ناندیڑ کے عوام نے فرقہ پرست طاقتوں کے خلاف ووٹ دیا

مہاراشٹر کے ناندیڑ شہر میں ہوئے میونسپل انتخابات میں کانگریس کی شاندار فتح کو ریاست کے سابق اقلیتی امور وزیر و سینئر کانگریس رکن اسمبلی محمد عارف نسیم خان نے اسے ناندیڑ کی عوام کی جانب سے فرقہ پرست طاقتوں کے خلاف دیا ہوا ووٹ قرار دیا ۔ انتخابات میں کانگریس کو ۷۱ نشستیں حاصل ہونے پر نسیم خان نے اظہار حیرت کرتے ہوئے کہا کہ گنگا جمنی تہذیب والے اس شہر کی عوام نے کانگریس کی حمایت میں شہر کی ترقی کے لئے اور فرقہ پرست طاقتوں کے خلاف اپنے جمہوری حقوق کا استعمال کیا ۔سابق وزیر اعلیٰ اشوک چوان کے ہمراہ ناندیڑ شہر میں تقریباً ۲۸ انتخابی جلسوں سے خطاب کرنے والے نسیم خان نے کہا کہ اس انتخابات کو بی جے پی اور شیوسینا سمیت مجلس اتحاد المسلمین نے اپنی انا کا مسئلہ بنا رکھا تھا خود وزیر اعلیٰ نے اس شہر میں تقریباً ۲۵ سے زائد انتخابی جلسوں سے خطاب کرکے عوام سے مختلف وعدے کئے تھے جبکہ شیوسینا سربراہ اودھو ٹھاکرے اور ایم آئی ایم لیڈران اویسی برادران بھی یہاں خیمہ زن تھے لیکن لیکن قابل مبارکباد ہے ناندیڑ کی عوام جنہوں نے تفرقہ ڈالنے والی سیاست کو اپنے یہاں پنپنے نہیں دیا ۔