یوگی حکومت کا بد فیصلہ شیعہ وقف بورڈ کے کی ممبران بار خاست

یوگی حکومت کا بد فیصلہ شیعہ وقف بورڈ کے کی ممبران بار خاست

لکھنؤ شیعہ سنی وقف بورڈ کی سی بی ای جانچ کرنے کے بعد وزرے اعلی یوگی آدتیہناتھ نے جما کو بورڈ کا کے ٦ ممبروں کو برخاست کر دیا –شیعہ وقف بورڈ میں ١٠ ممبران ہے انمے سے ٦ ممبر اکھلیش یادو نے نا مزد کیے تھے ان ممبران ک بی جے پی حکومت نے ہٹا  دیا ہے – ہٹے گئے ممبران میں کوشامبی کے سبک راج سبھا ممبر اختر حسن رضوی مرادآباد کے سید والی حیدر مزففر نگار کی افشاں زیدی بارلے کی سید آزم حسسیں زیدی سید نجمل حسن رسوئی  اور علامہ زیدی شامل ہیں –ان ممبرانکو می ٢٠١٥ میں نا مزد کیا گیا تھا -اسے پہلے ریاستی حکومت نے شیعہ سنی وقف بورڈ میں بعد عنوانیاں کی جانچ کے بی ای سے کروانے کی مانگ کی تھی –دونو بورڈ کے چیرمانو پر وقف جیزیادوں میں کروڑو روپیے کے گھوٹالے اور بمعنی کا الزام لاگیا گیا تھا –اس پر شیعہ مولانا کلبے جواد نے کھا کی شیعہ سنی وقف بورڈ کو تحلیل کیے جانے کے حکومت کے فیصلے کا خیر مخدم کرتے ہے کھا کے اکچھا فیصلہ انے میں دیر تو لگی مگر فیصلہ سہی آیا ہے