اتراکھنڈ 69 اسمبلی سیٹوں پر پولنگ شروع، انتخابات میں کھڑے ہیں 628 امیدوار

اتراکھنڈ 69 اسمبلی سیٹوں پر پولنگ شروع، انتخابات میں کھڑے ہیں 628 امیدوار

اتراکھنڈ کی 69 اسمبلی سیٹوں پر پولنگ شروع ہو چکی ہے، اس میں 74 لاکھ سے زیادہ ووٹر الیکشن میں کھڑے 628 امیدواروں کی قسمت ای وی ایم مشین میں بند کر دیں گے. كرپرياگ سیٹ پر 12 فروری کو بہوجن سماج پارٹی کے امیدوار کلدیپ كانواسي کی سڑک حادثے میں موت ہونے کی وجہ سے وہاں ملتوی ہو گیا۔ ریاست کی 70 میں سے 69 سیٹوں پر ہی پولنگ ہو رہی ہے. پردیش میں آج 35،78،995 خواتین ووٹروں سمیت کل 74،20،710 ووٹر 628 امیدواروں کی قسمت الیکٹرانک ووٹنگ مشین میں بند کر دیں گے۔ كرپرياگ سیٹ پر ووٹنگ کے لئے الیکشن کمیشن نے اب 9 مارچ کی نئی تاریخ کا اعلان کیا ہے۔ ووٹنگ کے عمل کو بہتر بنانے کے لئے پولیس سمیت قریب 30،000 سکیورٹی کی تعیناتی کی گئی ہے۔ سکیورٹی کے علاوہ تقریبا 60،000 پولنگ اہلکاروں کو بھی ڈیوٹی میں لگایا گیا ہے۔ پردیش میں ان اسمبلی انتخابات میں پہلی بار تین اسمبلی حلقوں، ہردوار ضلع کے بھیل رانيپر، ادھم سنگھ شہر کے رودرپر اور دہرادون ضلع کے دھرمپر، میں وي وي پیڈ مشینوں کا بھی استعمال کیا جائے گا، جس کے ذریعے ووٹر خود یہ دیکھ سکیں گے کہ ان کا ووٹ اسی امیدوار کو گیا ہے جس کے لئے انہوں نے وی ایم پر بٹن دبایا تھا۔

اتراکھنڈ میں بدھ کو ہونے والے اسمبلی انتخابات کو دیکھنے پانچ ممالک کے نمائندے بھارت پہنچے ہیں۔ 13 لوگوں کا گروپ، جس میں روس، مصر، بنگلہ دیش، نمیبیا اور کرغزستان کے انتخابات مینجمنٹ کمیٹی (يےمبي) کے سربراہ اور نمائندے شامل ہیں، یہ ٹیم آج ہونے والی پولنگ کے عمل کو دیکھ رہی ہے۔

میدانی علاقوں میں 31 نشستیں ہیں جن میں تقریبا دو تہائی نشستیں بی جے پی نے جیتیں۔ وزیر اعلی ہریش راوت کی ساری حکمت عملی کا مرکزی نقطہ میدانی علاقوں میں بی جے پی سے برتری لینا ہے اسی بات کو ذہن میں رکھ کر راوت خود كچچھا اور ہردوار (دیہی) اسمبلی سیٹ سے لڑ رہے ہیں۔

کانگریس میں گزشتہ سال مارچ میں ہوئی ٹوٹ کے بعد پارٹی کے 10 رہنما بی جے پی میں شامل ہو گئے۔ موجودہ اسمبلی انتخابات میں بی جے پی نے پارٹی میں شامل ہوئے 13 کانگریسی لیڈروں کو ان انتخابات میں ٹکٹ دیا ہے اور اس کے لئے بی جے پی نے اپنے ہی لیڈروں کے ٹکٹ اس امید میں کاٹے کہ یہ بڑے لیڈر پارٹی کے لئے انتخابات جیت جائیں گے لیکن ڈھیر سارے باغیوں کے کھڑے ہونے سے بی جے پی کے لئے سردرد بڑھا ہے۔